آتشی قوس قزح نے امریکیوں کو حیران کردیا

کیلیفورنیا: امریکی ریاست کیلی فورنیا میں منفرد قسم کی آتشی قوس و قزح ’فائر ریمبو‘ نے آسمان پر خوبصورت رنگ بکھیر دیئے جسے دیکھ کر لوگوں کو خوش گوار حیرت کا سامنا ہوا۔

بین الاقوامی خبر رساں ادارے کے مطابق کیلی فورنیا میں واقع نیشنل پارک میں اس وقت منظر رنگین اور خوبصورت ہوگیا جب آسمان پر قوس و قزح کے رنگ مدھم شعلوں کی طرح بکھر گئے۔

نیلگوں آسمان پر دھنک کے سارے رنگ خوبصورت مصوری کا شاہکار محسوس ہورہی تھے۔ شہریوں نے ان دلفریب مناظر کو دیکھنے کے لیے قومی پارک کا رخ کیا۔ ایک فوٹوگرافر نے ان مناظر کو فلم بند کر کے پوری دنیا کو اس خوبصورت نظارے سے محظوظ کرنے کا بندوبست کردیا۔
آتشی قوس و قزح (فائر ریمبو) کو اس سے قبل Circumhorizontal Arc کہا جاتا تھا جو اُس وقت نمودار ہوتی ہے جب سورج افق سے 58 ڈگری اوپر کی جانب ہو اور سورج سے نکلنے والی شعاعیں بادلوں میں برف کے کرسٹلز سے چھنتی ہوئی زمین تک پہنچ رہی ہوں۔ ایسے دلکش مناظر شاذو نادر ہی دستیاب ہوتے ہیں۔

اسے آتشی قوس قزح کہنے کی وجہ یہ ہے کہ اسے دیکھ کر سب سے پہلے آگ کے دھیمے شعلوں کا گماں ہوتا ہے بالکل ایسا کہ جیسے ہلکی آگ جل رہی ہو اور ہوا چل پڑے تو آگ کے بکھرتے شعلوں میں تمام رنگ نمایاں ہوجاتے ہیں۔

سائنس دانوں کا کہنا ہے کہ قوس قزح کی 12 اقسام ہیں جن میں سب سے عمومی قوس قزح سات رنگوں کے ایک نیم دائرے کا بننا ہے تاہم آتشی قوس قزح میں دھنک کے یہ رنگ مدھم شعلوں کی شبیہ پیش کرتے ہیں، یہ منظر نہایت دلفریب ہوتا ہے۔

You may also like...

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *

This site uses Akismet to reduce spam. Learn how your comment data is processed.

%d bloggers like this: